“انسانیت کی جان محمدﷺ کی عظمت کو سلام”

 

رسول اللہ ﷺ کی ذاتِ اقدس کی کیا خوب شان ہے کہ آپ ﷺ پر قرانِ مجید میں خود اللہ پاک درودوسلام بھیج رہا ہے اور ہمیں بھی حکم دے رہا ہے کہ ہم بھی رسول ﷺ پر درود پڑھیں اور سلام بھیجیں-
.
إِنَّ اللَّهَ وَمَلَائِكَتَهُ يُصَلُّونَ عَلَى النَّبِيِّ يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا صَلُّوا عَلَيْهِ وَسَلِّمُوا تَسْلِيماً (الاحزاب 56)


ترجمہ : “اللہ تعالٰی اور فرشتے، نبی ﷺ پر درودوسلام بھیجتے ہیں، اسلیے اے ایمان والو…! تم بھی آپ ﷺ پر درودوسلام بھیجو-“


.
یا رسول اللہ تیرے دَر کی فضاؤں کو سلام
گنبدِ خَضرا کی ٹھنڈی ٹھنڈی چھاؤں کو سلام
.
کہنے والے کہتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ پر صلوٰۃ السلام پڑھنا جائز نہیں ہے حالانکہ اگر ہم “الصلوٰة والسلام علیک یا رسول اللہ ﷺ” کہتے ہیں تو ہم دین میں کوئی نئی بات نہیں نکال رہے، ہم تو سورہ الاحزاب کے مطابق حکمِ خداوندی پر عمل کر رہے ہیں تبھی اس ذاتِ عالی وقار محمد ﷺ پر سلام بھیجتے ہیں-
.
جو مدینے کے گلی کوچوں میں دیتے ہیں صدا
اُن فقیروں، راہ گیروں اور گداؤں کو سلام
.
ایک اور قابلِ غور بات کہنا چاہوں گا کہ سلام اُسی پر بھیجا جاتا ہے جو حاضر ہو … رسول اللہ ﷺ تمام جہانوں کے لیے رحمت ہیں- اگر آپ ﷺ محض اپنے دَور کے لوگوں کے لیے رحمت ہوتے تو تمام عالمِ اسلام کو آپ ﷺ پر درود پڑھنے اور سلام بھیجنے کا حکم نہ دیا جاتا-
.

مسجدِ نبوی کے صُبح اور شاموں کو سلام
یا نبی تیرے غلاموں کے غلاموں کو سلام

 

Madina Shareef Image
.
وَالسَّلَامُ عَلَيَّ يَوْمَ وُلِدتُّ وَيَوْمَ أَمُوتُ وَيَوْمَ أُبْعَثُ حَيًّا ﴿٣٣﴾ ذَٰلِكَ عِيسَى ابْنُ مَرْ‌يَمَ ۚ قَوْلَ الْحَقِّ الَّذِي فِيهِ يَمْتَرُ‌ونَ ﴿٣٤﴾
.
سورہ مریم آیت نمبر 33 ، 34 ۔ ترجمہ : “اور مجھ پر سلام ہو میرے میلاد کے دن، اور میری وفات کے دن، اور جس دن میں زندہ اٹھایا جاؤں گا، یہ مریم علیہ السلام کے بیٹے عیسٰی علیہ السلام ہیں، (یہی) سچی بات ہے جس میں یہ لوگ شک کرتے ہیں”
.
اگر غور کیا جائے تو قرآن کی اِن آیات سے واضح ہوتا ہے کہ خود رب کریم بھی اپنے ایک پیغمبر عیسٰی علیہ السلام کے یوم ولادت و وصال کے دن پر بھی سلام بھیج رہا ہے کیونکہ یہ قرآن کے الفاظ ہیں اور قرآن کے الفاظ تو اللہ پاک کے کلمات ہیں- کیا آج کا گمراہ انسان اللہ سبحان وتعالیٰ پر بھی اعتراض کرے گا کہ نعوزباللہ اللہ خود خالقِ کائنات ہونے کے باوجود اپنی مخلوق پر سلام کیوں بھیج رہا ہے؟ مگر یہ کوئی من گھڑت باتیں تو نہیں، خود قرآن ہی کی تعلیمات ہیں-
.
اللہ نے یہ کلام نازل کر کے ہمیں یہ پیغام دیا کہ یہ لوگ میرے محبوب بندے ہیں اور مَیں (اللہ) ان سے محبت کرتا ہوں اور جن سے مَیں (اللہ) محبت کرتا ہوں وہ ہر لحاظ سے عظمت اور برکت والے ہوتے ہیں اور میری (اللہ) طرف سے اُن پر سلامتی ہے-
.
والہانہ جو طوافِ روضہِ اقدس کریں
مست و بےخود وجِد کرتی اُن ہواؤں کو سلام
.
اللہ ہم سب کو شانِ محمد ﷺ سمجھنے کا ظرف عطا فرمائے اور قرآن کو سمجھ کر پڑھنے اور اس پر عمل کرنے کی توفیق دے۔
آمین

Leave a comment

In response to:

انسانیت کی جان محمدﷺ کی عظمت کو سلام

Your email address will not be published.