Owais Razvi Qadri Siddiqui
Sufi Singer

یہی تمناہے میں بھی کچھ دن درنبی پرگزارآؤں

613
یہی تمناہے میں بھی کچھ دن درنبی پرگزارآؤں
جولے کے جاؤں اثاثہ جاں وہ ان کے قدموں پہ وارآؤں
ہوں میں بھی اک منتظرمسافر،سکون قلب ونظرکی خاطر
یہاں سے میں بے قرارجاؤں وہاں سے لےکرقرارآؤں
میں آپ کی خاک درکے صدقے میں آپ کی اک نظرکے صدقے
کبھی درفیض واہومجھ پر،کہ عاقبت کوسنوارآؤں
بساؤں نس نس میں اس طرح میں تبسم مصطفی کی نکہت
میں اپنی دنیاسنوارآؤں میں اپنی ہستی نکھارآؤں
نظرہومجھ پرطبیب میرے کہ جاگ اٹھیں نصیب میرے
مجھے بھی اے میرے بندہ پرور،عطاہویہ اختیارآؤں
میں چوموں کعبہ کوہرطرف سے پھروں مدینے کی ہرگلی میں
میں بارباراس دیاراقدس میں جاؤں اورباربارآؤں
حضورکے درپہ جان دیدوں،مری یہی آرزوہے جعفر
جوبوجھ سرپہ ہے زندگی کاوہ بوجھ سرسے اتارآؤں
Comments
Loading...